ڈھڈیال مسلم لیگ ن کے سرکردہ رہنماؤ کی کوششوں سے قصبہ جوند کے دو مخالف گروپوں کے در میان صلح ہوگئی

ڈھڈیال ( نمائندہ خصو صی)ڈھوک بھٹیاں داخلی جوند میں مقتول تصدق حسین کے لواحقین نے اپنے مخالفین کو معاف کردیا۔ فریقین کے درمیان صلح کیلئے گزشتہ کچھ عرصہ سے کوششیں جاری تھیں جو بالآخر رنگ لے آئیں۔ علاقہ کے عوام نے اس راضی نامہ کو ایک احسن اقدام قرار دے دیا۔ 2004ء میں ایک معمولی تنازعہ پر تصدق حسین بھٹی کے ہاتھوں راجہ رستم خان قتل ہو گئے تھے جس کا بدلہ لیتے ہوئے 2011ء میں تصدق حسین بھٹی کو قتل کردیا گیا۔اس قتل میں راجہ عصمت خان، راجہ منصب خان اور غلام مصطفی عرف پپو کو نامزد کیا گیا۔ راجہ منصب خان کو عدالت نے عمر قید کی سزا سنائی جبکہ راجہ عصمت خان اشتہاری اور غلام مصطفی عرف پپو کی ہائی کورٹ میں اپیل دائر تھی ۔ فریقین کے درمیان دشمنی کے خاتمہ اور راضی نامہ کیلئے مسلم لیگ ن کی ضلعی منتخب قیادت نے چند ماہ قبل کموڈورارشد ایم خان ، چیف کوارڈی نیٹر ہارون عباس جوند، چوہدری غلام مرتضیٰ ہرل مونا، صوفی مشتاق بھٹی ، ملک خالد نوابی ، سلطان محمود عرف مودا نائی ، اسسٹنٹ رجسٹرار ہائی کورٹ راولپنڈی بینچ ملک طارق اعوان اور علاقہ کے دیگر معززین پرمشتمل ایک پندرہ رکنی مصالحتی کمیٹی تشکیل دی گئی جس کی شب وروز محنت رنگ لائی اور اس سلسلہ میں گزشتہ شام ڈھوک بھٹیاں میں ایک تقریب تصدق حسین بھٹی کی رہائشگاہ پر منعقد ہو ئی جس میں ڈھڈیال مرکز سے مسلم لیگ ن کی سرکردہ اور دیگر اہم شخصیات نے شرکت کی ۔تقریب سے چیف کوارڈی نیٹر ہارون عباس جوند، حاجی آفتاب منہاس، شکیل منہاس ، راجہ عنصر جوند، اعجاز منہاس ، چوہدری رزاق ، سلطان محمود عرف مودا نائی ، قاضی ارشد، راجہ نوروز، ملک خالد نوابی ، چوہدری صفدررتہ، قاضی شفیق رانجھا، چوہدری اعجاز سانگ، چوہدری مرتضیٰ ہرل، صوفی مشتاق بھٹی ، چوہدری حیدر سلطان، انچارج ایم این اے سیکرٹریٹ ملک نعیم اصغر اور کموڈور ایم ارشد خان نے بھی خطاب کیا۔ مقررین نے فی سبیل اللہ اپنے باپ کا خون معاف کرنے پر تصدق حسین بھٹی کے صاحبزادوں کو زبردست خراج تحسین پیش کیا اور ان کے اس عمل کو ایک عظیم قربانی قرار دیا ۔ انہوں نے کہا کہ جن افراد نے اس کارخیر میں حصہ لیا اللہ انہیں بھی اجر دے گا۔ راجہ منصب خان نے مسلم لیگ ن کی قیادت ، کمیٹی اور تصدق حسین بھٹی کے صاحبزادوں کا دلی شکریہ ادا کرتے ہو ئے کہا کہ ان پر جو احسان کیا گیا ہے وہ اسے کبھی فراموش نہیں کریں گے ۔ فیض سلطان بھٹی نے اپنے خاندان کی نمائندگی کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے فی سبیل اللہ اور غیر مشروط اپنے باپ کا خون معاف کیا ہے جس کا اللہ ہی ہمیں اجر دے گا۔ تقریب کے اختتام پر مفتی عزیز الرحمن نے دعا کرائی جبکہ سٹیج سیکرٹری کے فرائض ڈاکٹر اعجاز مغل نے سرانجام دیے ۔ بعدازاں تقریب کے شرکا ء کے اعزاز میں عشائیہ دیا گیا ۔